ڈینگی 300

ڈینگی کے حملے جاری، کیسز میں خطرناک حد تک اضافہ

ملک بھر میں ڈینگی کے حملے جاری ہیں جس کے باعث کیسز میں خطرناک حد تک اضافہ دیکھنے کو مل رہا ہے۔

تفصیلات کے مطابق ملک بھر میں ڈینگی کی صورتحال دن بہ دن خراب ہوتی جارہی ہے جس کے پیش نظر یومیہ ہزاروں کیسز رپورٹ ہورہے ہیں۔

محکمہ صحت کی جاری کردہ رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ پشاور سمیت خیبرپختونخوا میں ڈینگی کےکیسز میں خطرناک حد تک اضافہ ہورہا ہے۔

محکمہ صحت نے بتایا کہ گزشتہ چوبیس گھنٹوں میں ڈینگی کے مزید 259کیسز سامنے آئے ہیں جس کے بعد مجموعی کیسز کی تعداد 6ہزار 412ہوگئی ہے-

محکمہ صحت کا کہنا ہے کہ مردان ،پشاور اور خیبر ڈینگی وائرس کی لپیٹ میں ہیں، اب تک مجموعی طور پر مردان میں سب سے زیادہ 1ہزار 918،پشاور میں 1ہزار 695،خیبر 687 کیسز رپورٹ ہوئے ہیں ہیں۔

محکمہ صحت کا مزید کہنا ہے کہ صوبے میں ہلاکتوں کی تعداد 7 ہوگئی ہے۔

دوسری جانب کراچی میں بھی ڈینگی کیسز میں ہوشربا اضافہ ہورہا ہے۔

محکمہ صحت سندھ کی جاری رپورٹ گزشتہ چوبیس گھنٹوں میں سندھ بھر میں 335 کیسز رپورٹ ہوئے جن میں سے 257 کیسز کا تعلق کراچی سے ہے۔

محکمہ صحت سندھ کے مطابق ضلع کورنگی 126 ، ضلع شرقی 55 ،ضلع وسطی 34 کیس، ضلع جنوبی 26 ، ضلع کیماڑی 8 ، ضلع ملیر 7 اور ضلع غربی 1 کیس رپورٹ ہوا۔

محکمہ صحت نے بتایا کہ رواں سال کراچی میں ڈینگی سے 30 افراد اور حیدرآباد میں 1 شخص جان کی بازی ہارا جبکہ سب سے زیادہ ہلاکتیں ضلع وسطی میں رپورٹ ہوئی۔

محکمہ صحت سندھ کا مزید کہنا ہے کہ رواں سال سندھ بھر میں7 ہزار 530 کیسز رپورٹ ہوئے۔

ڈینگی روکنے کے لیے کمشنر کراچی کا نیا حکم نامہ جاری

کراچی میں تعلیمی اداروں میں ایک ماہ تک پی ٹی اور اسمبلی پر پابندی کا فیصلہ عائد کیا گیا ہے۔

کمشنر کراچی کا کہنا ہے کہ اسٹوڈنٹس کو مکمل آستین اسکول ڈریسز پہننے کی ہدایت کی جائے اور تعلیمی اداروں میں صفائی کا خیال رکھا جائے۔

کمشنر کراچی نے کہا کہ ڈینگی پھیلاؤ روکنے کے لیے پہلے سے کھڑے پانی کی نکاسی اور اسپرے کیا جائے، ڈینگی مچھر ہونے پر اسکول انتظامیہ فوری متعلقہ ضلعی انتظامیہ کو آگاہ کرنے کی پابند ہوگی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں